پلوامہ میں جھڑپ، ایک دہشت گرد اور ایک فوجی اہلکار ہلاک

پلوامہ کے گاسو نامی علاقے میں دہشت گردوں کے بارے میں خفیہ اطلاع ملنے پر پولیس نے مشتبہ جگہ کا محاصرہ کر لیا۔ اس دوران وہاں موجود دہشت گردوں نے فائرنگ کی جس میں ایک فوجی اور ایک پولیس اہلکار شدید طور پر زخمی ہوئے۔

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے گاسو میں منگل کی علی الصبح چھڑنے والے ایک مسلح تصادم میں اب تک ایک دہشت گرد اور ایک فوجی اہلکار ہلاک، جبکہ جموں و کشمیر پولیس کا ایک اہلکار زخمی ہوگیا ہے۔

پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ علاقے میں جاری آپریشن میں اب تک ایک دہشت گرد مارا گیا ہے جس کی شناخت معلوم کی جارہی ہے۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پلوامہ کے گاسو نامی علاقے میں دہشت گردوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر پلوامہ پولیس، فوج کی 53 آر آر اور سی آر پی ایف نے مذکورہ علاقہ کو منگل کی علی الصبح محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن شروع کیا۔

انہوں نے کہا کہ ایک مشتبہ جگہ کو محاصرے میں لینے کے دوران وہاں موجود دہشت گردوں نے فائرنگ کی جس کے نتیجے میں ایک فوجی اور ایک پولیس اہلکار شدید طور پر زخمی ہوئے۔

انہوں نے کہا کہ دونوں زخمیوں کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں فوجی اہلکار زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔

ذرائع نے بتایا کہ ابتدائی فائرنگ کے بعد طرفین کے درمیان چھڑنے والے تصادم میں اب تک ایک دہشت گرد مارا گیا ہے جس کی شناخت معلوم کی جارہی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ علاقے میں آپریشن جاری ہے۔

دریں اثنا مزید ایک دہشت گرد کی ہلاکت کے ساتھ وادی کشمیر میں رواں برس اب تک مارے جانے والے دہشت گردوں کی تعداد بڑھ کر 123 ہوگئی ہے۔ ان میں بعض اعلیٰ دہشت گرد کمانڈر بھی شامل ہیں۔

تعارف: hamslive

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*